جمال ہشوشکی سعودی قونصلیٹ میں قتل؟

دنیا
79
0

ترکی میں سعودی قونصلیٹ میں جانے والے سعودی صخافی کو قتل کیا گیا ہے ، اسکا اظہار ترکی کی انویسٹی گیشن ٹیم نے اس وقت کیا جب انکو ترقی میں‌موجود سعودی قونصلیٹ میں جانے کی اجازت دی گئی. ترکی کا مزید کہنا تھا کہ ان کے انٹیلیجنس ادارے کے پاس شوائد موجود ہیں جسمیں 15 سعودی پرائیوٹ طیاروں کی مدد سے ترکی میں داخل ہوئے جن میں سے دو سعودی بادشاہ سلمان‌کے قریبی خفاظتی گارڈ بھی تھے . جمال ہشوشکی کو سعودی قونصلیٹ میں داخل ہوتا دیکھا جا سکتا ہے لیکن اسکے بعد وہ واپس باہر نا آئے . وہ سعودی قونصلیٹ میں اپنی شادی اور دوسری دستاویزات لینے کے لیے گئے تھے . اس ضمن میں سعودیہ پر شدید دباؤ دیکھا جا رہا ہے ، جس کا عملی مظاہرہ بہت سے ملکوں کا سعودیہ میں آنے والی عالمی معاشی کانفرنس سے بائیکاٹ کرنا ہے .
یاد رہے کے کسی بھی ملک میں قونصلیٹ دوسرے ملک کا علاقہ مانا جاتا ہے . اس کے اندر اسکی ملک کے قانون کا اطلاق ہوتا ہے .

Facebook Comments